اتوار, 17 اکتوبر 2021

 

ایمز ٹی وی (اسپورٹس) پاکستان سپر لیگ میں شرکت کے لیے ٹیم لاہورقلندرز دبئی پہنچ گئی ہے جو ایونٹ میں شرکت کےلیے یو اے ای آنے والی پہلی ٹیم ہے ۔

پاکستان سپر لیگ کے دوسرے ایڈیشن میں جیت کا عزم لیے لاہور قلندرز کے کھلاڑی دبئی پہنچ گئے ہیں ۔ کپتان برینڈن میکلم سمیت دوسرے غیر ملکی کھلاڑیوں کے دبئی پہنچنے کا سلسلہ بھی آج شروع ہو جائے گا ۔

ٹیم مینجمنٹ کا کہنا ہے کہ ایونٹ سےایک ہفتے قبل پہنچنے کا مقصد موسم سے ہم آہنگ ہونا ہے اور ساتھ ہی نئے کپتان برینڈن میکلم کو بھی کھلاڑیوں کو جانچنے اور سمجھنے کا موقع ملے گا ۔

ٹیم کے رکن عمر اکمل عمرہ کی ادائیگی کے لیے سعودی عرب ہیں وہ وہاں سے دبئی پہنچیں گے اور ٹیم کو جوائن کریں گے۔ اظہر علی بھی دو روز میں دبئی پہنچ جائیں گے ۔

لاہور قلندرز لیگ کا پہلا میچ دس فروری کو کوئٹہ گلیڈیئٹر کے خلاف کھیلے گی ۔

 

 

 

ایمز ٹی وی(لاہور) پنجاب کے وزیر قانون رانا ثنااللہ نے کہا ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ امریکا کا عمران خان اور عمران خان پاکستان کے ڈونلڈ ٹرمپ ہیں، 2018ءمیں پاکستانی ڈونلڈ ٹرمپ کی سیاست دفن کر دیں گے۔
پنجاب کے وزیر قانون رانا ثنااللہ نے صوبائی اسمبلی کے اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ امریکا کا عمران خان اور عمران خان پاکستان کے ڈونلڈ ٹرمپ ہیں، 2018ءمیں پاکستانی ڈونلڈ ٹرمپ کی سیاست دفن کر دیں گے۔
انہوں نے کہا ہے کہ کہ اپوزیشن وزیراعظم نواز شریف کے خلاف کیس ثابت کرنے میں ناکام ہو گئی، پیش گوئیاں غلط ثابت ہونے پرشیخ رشید کو15جنوری کے بعد ڈوب مرنا چاہیے۔
انہوں نے کہا ہے کہ 2014ءمیں پاکستانی ڈونلڈ ٹرمپ کی حرکتوں سے بال بال بچے ہیں،پنجاب میں جماعت الدعوہ کے خلاف کوئی ثبوت نہیں،کالعدم تنظیموں کے خلاف جہاں بھی شکایت ہوگی کارروائی کریں گے، حافظ سعید کے خلاف جو بھی شواہد ہیں وہ وفاق کے پاس ہیں، انہیں وفاقی حکومت کے کہنے پر نظربند کیا گیا، نظر بندی میں توسیع بھی ہو سکتی ہے۔
انہوں نے کہا ہے کہ شیخ رشید بات کو دلچسپ بنانے کے لیے فضول باتیں کرتے ہیں، 15جنوری کے بعد تو شیخ رشید کو شرم سے ڈوب مرنا چاہیے تھا، ڈونلڈ ٹرمپ امریکیوں کی غلطی کی سزا ہے

 

 

ایمز ٹی وی( تعلیم / کراچی) جامعہ کراچی کی مرکزی طعام گاہ کی تزئین و آرائش کی تقریب کے دعوت نامے میں املا کی سنگین غلطیاں پائی گئی ہیں اور اس دعوت نامے کو غلطیاں درست کئے بغیر ہی تقسیم کر دیا گیا۔ بدھ کو جامعہ کراچی میں ہونے والی افتتاحی تقریب میں وزیرتعلیم جام مہتاب ڈہر اور وائس چانسلر ڈاکٹر اجمل بھی موجود تھے جہاں شرکاء کے درمیان غلطیوں سے بھرا دعوت نامہ موضوع بحث رہا اور شرکاء یہ گفتگو کرتے رہے کہ جامعہ کراچی کا معیار تعلیم اتنا گر گیا ہے کہ اب علمی سرقے کے ساتھ ساتھ دعوت نامے بھی غلط چھپنے لگے ہیں اور انتظامیہ خاموش ہے۔

اس دعوت نامے میں کئی سنگین املا کی غلطیاں تھیں حتیٰ کہ فیکلٹی اور اسپیچ کی اسپیلنگ بھی غلط لکھی ہوئی تھی۔ ڈین آف سوشل سائنس ڈاکٹر مونس احمر نے بتایا کہ کنٹریکٹر نے فون پر میرا اور وائس چانسلر کا نام اور عہدہ معلوم کیا تھا جو بتا دیا گیا تھا۔ یہ دعوت نامہ جامعہ کراچی نے نہیں چھپوایا تھا بلکہ مرکزی طعام گاہ جس نے ٹھیکے پر لی اس نے اسے چھپوا یا۔

جب مجھے دعوت نامہ ملا تو میں نے تقریب سے ایک روز قبل کنٹریکٹر کو بتایا اور اسے غلطیاں دور کرنے کی ہدایت کی لیکن اس نے کہا کہ اب تو دیر ہوگئی اور اسے تقسیم کیا جا چکا ہے۔ ڈاکٹر مونس نے کہا کہ دعوت نامے پر مت جائیں بلکہ طعام گاہ کو دیکھیں بہت شاندار تزئین و آرائش کی گئی ہے۔

 

 

ایمز ٹی وی) سعودی عرب کے بعد متحدہ عرب امارات نے بھی 7 مسلم ممالک پر امریکہ کے سفر کرنے پر پابندی کی حمایت کردی ہے
گذشتہ روز سعودی عرب کے وزیر تیل کی امریکی فیصلے کی حمایت میں بیان آنے کے بعد اب متحدہ عرب امارات کے وزیرخارجہ شیخ عبداللہ بن زائد النہیان نے کہاہے کہ جن مسلم ممالک پر سفری پابندی لگائی گئی ہے اس کامطلب یہ نہیں کہ تمام مسلمانوں پر پابندی عائد کردی گئی ہے۔
خلیجی ممالک میں سے یہ ٹرمپ کے حمایت میں پہلا بیان سامنے آیا ہے جس میں امارت کے وزیرخارجہ نے کہا کہ امریکہ کو اپنے فیصلے کرنے میں خودمختاری کا حق حاصل ہے۔شیخ عبداللہ نے امریکی انتظامیہ کے اس فیصلے کی مزید حمایت میں کہا کہ سفری پابندی کے فیصلہ کا ہرگز مطلب یہ نہیں کہ یہ کسی مذہب کے خلاف ہے اور اس بات کا خیال رکھنا چاہیے کہ اکثریتی مسلم ممالک پر پابندی نہیں عائد کی گئی ہے۔انہوں نے کہا کہ ”یہ پابندی عارضی ہے اور تین ماہ کے بعد اس پر غوروخوض کیا جائے گا ۔
لہٰذا ضروری یہ ہے کہ ہم اس بات پر اب زیادہ توجہ نہ دیں۔ان کا مزید کہنا تھا کہ جن مسلم ممالک پر یہ پابندی عائد کی گئی ہے وہاں بہت سے اندرونی مسائل ہیں اور یہ ممالک اپنے مسائل کو حل کرنے پر توجہ دیں ۔متحدہ عرب امارات کے وزیرخارجہ نے یہ تمام باتیں روسی وزیرخارجہ سرگئی لاروف سے ملاقات کے دوران کیں۔قبل ازیں سعودی عرب کے وزیرتیل خالد الفلیح نے ٹرمپ کے مسلم ممالک پر پابندی کے فیصلے کی حمات کی تھی اور کہا تھا کہ یہ امریکہ کا حق ہے کہ وہ جس پر چاہے پابندی لگا سکتا ہے

 

 

ایمزٹی وی ( تعلیم /خیرپور )شاہ عبداللطیف یونیورسٹی میں جرمن نیڈ بیسڈ اور ہائیر ایجو کیشن کمیشن کی جانب سے طلبہ میں اسکالر شپ کے چیک تقسیم کرنے کی تقریب کا انعقاد وائس چانسلر ڈاکٹر پروین شاہ نے اسکالرشپ چیک تقسیم کئے۔ تفصیلات کے مطابق شاہ عبداللطیف یونیورسٹی میں جرمن نیڈ بیسڈ اور ہائیر ایجوکیشن کمیشن اسلام آباد کی جانب سے مستحق طلبہ و طالبات میں چیک تقسیم کرنے کی تقریب منعقد ہوئی یونیورسٹی کی وائس چانسلر ڈاکٹر پروین شاہ نے ذہین و مستحق طلبہ و طالبات میں اسکالر شپ چیک تقسیم کئے ۔

وائس چانسلر ڈاکٹر پروین شاہ نے اس موقع پر کہاکہ جرمن نیڈ بیسڈ اور ہائیر ایجوکیشن کمیشن اسلام آباد کا ذہین و مستحق طلبہ و طالبات کو اسکالرشپ دینے کا فیصلہ قابل تعریف ہے انہوں نے کہاکہ ہائیرایجوکیشن کمیشن کا تعلیم کے فروغ میں اہم کردار ہے۔ جبکہ جرمن نیڈ بیسڈ کا اسکالر شپ پروگرام بھی نہایت اہم ہے ،قابل طلبہ و طالبات کو اسکالر شپ دینےسے ان کے حوصلے بڑھیں گے اور ان کو اعلیٰ تعلیم کے حصول میں مدد ملے گی، اسکالر شپ پروگرام کے فوکل پرسن پروفیسر ڈاکٹر ونود کمار نے اس موقع پر اپنی تقریر میں کہاکہ 35طلبہ و طالبات کو جرمن نیڈ بیسڈ پروگرام کے تحت اسکالر شپ دی گئی ہر طالبعلم نے 17ہزار 7سو روپے کے چیک وصول کئے ۔

جبکہ 141طالبات کو ہائیر ایجوکیشن کمیشن کی جانب سے اسکالر شپ چیک دیئے گئے ان کو 65ہزار سے 70ہزار تک کے چیک ملے جس پر طلبہ و طالبات میں خوشی کا اظہار کیا، تقریب میں پرووائس چانسلر ڈاکٹر نور احمد شیخ ، پروفیسر ڈاکٹر ممتاز حسین مہر،پروفیسر ڈاکٹر بدر الدین میمن، پروفیسر ڈاکٹر تاج محمد لاشاری،رجسٹرار پروفیسر ڈاکٹر سید اسد رضا عابدی،صدر سلوٹہ پروفیسر ڈاکٹر مینہو ں خان لغاری اور جنرل سیکرٹری پروفیسر ڈاکٹر اختیار علی گھمرو اور دیگر شریک ہوئے۔

 

 

ایمز ٹی وی(واشنگٹن)امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے دعویٰ کیا ہے کہ ایران مسلمان ملک عرا ق پرقبضہ جما رہا ہے ۔
ایران کے بلیسٹک میزائل تجربے کے فوری بعد امریکی صدر نے رات گئے اپنے ٹویٹر پیغام میں دنیا کو بتانے کی کوشش کی ہے کہ عراق کو بچانے کی امریکی کاوشوں کے باوجود ایران کی حکومت وہاں تیزی سے غالب آرہی ہے ۔”امریکا کی طرف سے عراق میں اب تک تین کھرب ڈالر خرچ کیے جانے کے باوجود ایران عراق پربہت تیزی سے زیادہ سے زیادہ تسلط قائم کر رہا ہے

 

 

ایمز ٹی وی(کراچی) شہر قائد میں رینجرز نے کارروائی کر کے گینگ وار کمانڈرنور محمد عرف بابا لاڈلا کو دوساتھیوں سمیت ہلاک کردیا ۔
میڈ یا رپورٹس کے مطابق رات گئے رینجرز نے لیاری کے علاقے پھول پتی لین میں سرچ آپریشن کیا ہے، اس دوران فائرنگ کے تبادلے میں گینگ وار کمانڈر بابا لاڈلا دیگر 2ساتھیوں سمیت مارا گیاجبکہ تین ملزما ن تاریکی کا فائدہ اٹھاتے ہوئے فرار ہو گئے جن کی تلاش کیلئے سرچ آپریشن جاری ہے۔ ملزمان کی فائرنگ سے ایک رینجرز اہلکاربھی زخمی ہوا ہے ، ملزمان کے قبضے سے آٹومیٹیک اسلحہ اوردستی بم برآمد ہوا ہے۔
ترجمان رینجرز کا کہنا ہے کہ کارروائی علاقے میں ملزمان کی موجودگی کی اطلاع پرکی گئی، کارروائی کے دوران عمارتوں کی چھتوں سے ینجرزپرفائرنگ کی گئی۔ اس دوران نور محمد عرف بابا لاڈلامارا گیا جبکہ بابا لاڈلاکے2قریبی ساتھی بھی مقابلے میں مارے گئے۔ہلاک ہونے والا ملزم یاسین عرف ماما با با لاڈلا کا دست راست سمجھا جاتا تھا جبکہ ملزم سکندر بابا لاڈلا کا قریبی ساتھی اور بطور سہولت کار کام کرتا تھا ۔رینجرز کا کہنا ہے کہ ملزم سکندر عرف سکو 15سے زائد وارداتوں میں ملوث تھااور وہ جھٹ پٹ مارکیٹ بم دھماکے میں ملوث تھا ۔

انہوں نے بتا یا کہ بابا لاڈلا نے لیاری میں متعدد ٹارچر سیل بنا رکھے تھے اور وہ پولیس کو 74سے زائد وارداتوں میں مطلوب تھا ۔بابا لاڈلا کے سر کی قیمت 25لاکھ روپے جبکہ سکندر عرف سکو کے سر کی قیمت 10لاکھ روپے مقرر کی گئی
تھی ۔بابا لاڈلالیاری آپریشن کے آغاز سے غائب ہو گیا تھا، بابالاڈلا لیاری گینگ وار کا مطلوب ترین کردار تھا اور خوف کی علامت سمجھا جاتا تھا۔

 

 

ایمز ٹی وی(بواشنگٹن) امریکا نے میزائل تجربے پر ایران کو خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایران عالمی طاقتوں کے ساتھ کیے گئے جوہری سمجھوتے کو خطرے میں ڈال رہا ہے ۔
امریکی قومی سلامتی کے مشیر مائیکل فلن نے اپنے بیان میں ایران کی بلیسٹک میزائل تجربے پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایران نے امریکا اورعلاقے کے اتحادیوں کو خطرے میں ڈال رکھا ہے ۔”فی الحال ہم ایران کو باضابطہ طور پر زیرِ انتباہ رکھ رہے ہیں“۔ابھی تک یہ واضح نہیں ہے کہ ایران کے اس اقدام پر امریکی صدر ٹرمپ کیا حکمت عملی اپناتے ہیں تاہم سینئر حکومتی حکام نے ایران پر فوجی آپریشن کو خارج از امکان قرار نہیں دیا ۔فلن نے کہا کہ ایران کے رہنما اب ایسا اقدام کرنے کی جرات کر رہے ہیں کیونکہ جوہری سمجھوتا کمزور اور غیر مو¿ثر ہے۔
انہوں نے کہا کہ اوباما انتظامیہ ایران کے بدنیتی پر مبنی اقدامات کا جواب دینے میں ناکام رہی، جس میں ہتھیاروں کی منتقلی، دہشت گردی کی حمایت اور بین الاقوامی ضابطوں کی دیگر خلاف ورزیاں شامل ہیں۔
قومی سلامتی کے مشیر نے مزید کہا کہ ٹرمپ انتظامیہ ایران کے اِن اقدامات کی مذمت کرتی ہے جس سے مشرقِ وسطیٰ اور باقی دنیا کی سلامتی، خوش حالی اور امریکیوں کی زندگی کو خطرہ لاحق ہوسکتا ہے۔دوسری جانب ایران نے جوہری سمجھوتے کی خلاف ورزی کے تاثر کو مسترد کردیا ہے

 

 

ایمز ٹی وی(کراچی) لیاری گینگ وار کا اہم کمانڈر بابا لاڈلا، قتل کی متعدد وارداتوں میں قانون نافذ کرنے والے اداروں کو مطلوب تھا۔ دس اکتوبر 1977کو لیاری کے علاقے چاکیواڑہ میں پیدا ہونے والے نور محمد کے بارے میں کوئی کہہ نہیں سکتا تھا کہ وہ ایسا گینگسٹر بنےگا جس سے لیاری پناہ مانگے گا۔
سن 80 کی دہائی کے آخر میں بدنام ڈاکو اور منشیات فروش حاجی لالو نے اپنے بیٹے ارشد پپو کے ساتھ ساتھ عبدالرحمان بلوچ عرف رحمان ڈکیت اور نور محمد عرف بابا لاڈلہ کو بھی جرائم کی تربیت دی۔
ابتدا میں تینوں ایک ساتھ کام کرتے رہے لیکن 1997 میں ہی اغوا کی ایک واردات کے دوران حاجی لالو اور رحمان میں اختلافات ہوگئے جس کے بعد حاجی لالو نے اپنے بیٹے ارشد پپو کی سربراہی میں اپنا الگ گروہ بنا لیا۔
عبدالرحمان اپنے گروہ کو لے کر الگ کام کرنے لگا، رحمان ڈکیت کا سب سے اہم رکن تھا ۔بابا لاڈلہ، 9 اگست 2009 کو رحمان ڈکیت کے مارے جانے کے بعد بابا لاڈلہ لیاری کا بے تاج بادشاہ بن گیا۔ عزیر بلوچ کے ساتھی بابا لاڈلا کا اغوا برائے تاوان، ٹارگٹ کلنگ، بھتا خوری، منشیات فروشی اور دیگر جرائم میں کوئی ثانی نہیں تھا ۔
 اس دوران ارشد پپو کو بھی بھائی اور ساتھی سمیت سفاک انداز میں قتل کردیا گیا۔
سن2013 رمضان المبارک کے آخری ایام میں چاکیواڑہ میں فٹ بال میچ کے دوران دھماکے کے بعد عزیر بلوچ اور بابا لاڈلہ میں اختلافات ہوگئے اور پھر بابا لاڈلہ نے غفا رزکری اور ارشد پپو کے بچ جانے والے ساتھیوں کے ساتھ مل کر اپنا گروہ دوبارہ منظم کر لیا۔
کراچی میں ٹارگیٹڈ آپریشن کے بعد بابا لاڈلا کے کراچی سے فرار ہوجانے کی بھی اطلاعات سامنے آئیں جبکہ مئی دوہزار چودہ میں پاک ایران سرحدکے قریب مبینہ مقابلے میں بابا لاڈلا کے مارے جانے کی خبر بھی آئی تھی۔
 

 

 

ایمز ٹی وی(کراچی) سندھ رینجرز کی جانب سے جاری اعلامیےکے مطابق مصدقہ اطلاعات پر لیاری گینگ وار کمانڈر کی موجودگی پر کارروائی کی گئی ۔
دہشتگردوں نےرینجرز کو دیکھتے ہی شدید مزاحمت کی جو35 منٹ تک جاری رہی ۔
ترجمان کے مطابق فائرنگ کے تبادلے میں لیاری گینگ وار کا انتہائی مطلوب اور بدنام زمانہ دہشت گرد نور محمد عرف بابا لاڈلا مارا گیا۔ کارروائی میں بابا لاڈلا کے دو ساتھی سکندر عرف سکو اور یاسین عرف ماما بھی مارے گئے ۔
یہ دہشت گرد متعدد وارداتوں اور سنگین جرائم میں ملوث تھے۔ تمام وارداتوں کی جانچ پڑتال کی جارہی ہے۔
سندھ رینجرز کے مطابق بابا لاڈلا نے لیاری میں متعدد ٹارچر سیل بنا رکھے تھے ، ملزم 74 سے زائد وارداتوں میں پولیس کومطلوب تھا۔ یکم ستمبر 2010 میں ملاں لطیف نامی شخص کا تشدد کے ذریعے قتل کیا گیا،بابالاڈلا نے اپریل 2012 میں پولیس پارٹی پر حملہ کیا، حملے میں ہیڈ کانسٹیبل فیاض اور پولیس کانسٹیبل طفیل جاں بحق ہوئے، ڈالیما کے رہائشی حاجی اسلم اور اس کے بیٹوں کو قتل کیا، بابا لاڈلا نے عزیر بلوچ کے ساتھ مل کرارشد پپو، یاسر عرفات اور شیرا پٹھان کا قتل کیا۔