جمعہ, 04 دسمبر 2020

ایمز ٹی وی(برازیلیا) برازیل کی ایک پرہجوم جیل میں دو جرائم پیشہ گروہوں کے تصادم کے نتیجے میں 30 قیدی ہلاک ہوگئے ، مرنے والوں میں سے بعض افراد کے سر قلم کردیے گئے ہیں جبکہ بعض افراد کو زندہ جلاکر مارا گیا ہے۔


مشرقی برازیل کے شہر ناٹال کی الاکوز جیل کی بیرک میں قید ایک جرائم پیشہ گروہ کے قیدیوں نے دوسرے گروہ کے قیدیوں کے بیرک پر حملہ کردیا۔ جیل ذرائع کا کہنا ہے کہ بہت سے قیدیوں کے سر تن سے جدا کیے گئے ہیں جبکہ متعدد کو زندہ جلایا گیا ہے جس کے نتیجے میں 30 قیدی ہلاک ہوئے ہیں۔ جیل میں 650 کی گنجائش سے زیادہ 1150 قیدی رکھے گئے تھے ۔


واضح رہے کہ رواں سال کے آغاز سے ہی برازیل کی مختلف جیلوں میں فسادات کے نتیجے میں متعدد افراد ہلاک ہوچکے ہیں ۔ یہ سلسلہ نئے سال کے موقع پر شروع ہوا تھا جب ماناؤس کی جیل میں تصادم کے نتیجے میں 56 قیدی ہلاک ہوگئے تھے جس کے بعد گزشتہ ہفتے بھی شمالی اور ایمازونین جیلوں میں تصادم کے نتیجے میں درجنوں افراد ہلاک ہوگئے تھے

ایمز ٹی وی(واشنگٹن) نو منتخب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے انٹیلی جنس ایجنسیوں کے سربراہان اور میڈیا کو روسی ہیکنگ کے معاملے پر غلطی پر قرار دیتے ہوئے معافی مانگنے کا مطالبہ کردیا۔


سوشل میڈیا ویب سائٹ ٹوئٹر پر سی آئی اے چیف کے بیان پر ردعمل دیتے ہوئے ڈونلڈ ٹرمپ نے معروف صحافی باب ووڈورڈ کا شکریہ ادا کرتے ہوئے امریکی صدر کو روسی ہیکنگ کے حوالے سے دی جانے والی بریفنگ پر ان کے تبصرے” ان دستاویزات کی حیثیت کچرے سے زیادہ نہیں ہے ،


یہ پیش ہی نہیں کی جانی چاہئیں تھیں ، انٹیلی جنس کے سربراہان نے یہی غلطی کی ہے اور جب لوگ غلطیاں کرتے ہیں تو انہیں معافی مانگنی چاہیے“ کا حوالہ دیتے ہوئے انٹیلی جنس ایجنسیوں کے سربراہان سے معافی مانگنے کا مطالبہ کیا اور انہوں نے میڈیا سے بھی مطالبہ کیا کہ وہ بھی اس عمل پرمعافی مانگے۔

واضح رہے کہ سی آئی اے کے ڈائریکٹر جان برینن نے امریکی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا تھا کہ روس کو ہر معاملے میں بری الذمہ قرار دینا نہیں چاہیے، ٹرمپ کو یقینی بناناہوگا کہ ان کے بیانات سے ملکی سالمیت کو کوئی خطرہ نہیں ہوگا۔یہ معاملہ اب ٹرمپ کا نہیں متحدہ امریکا کا مسئلہ ہے اور اگر ٹرمپ صدر کے عہدے کا حلف لیں گے تو امریکا کا مفاد اولین ترجیح ہوگا۔


دوسری جانب کچھ روز پہلے امریکی خفیہ ایجنسیوں نے نو منتخب امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو بریفنگ دیتے ہوئے کہا تھا کہ روس کے پاس ان کی شرمناک قسم کی ویڈیوز موجود ہیں جن کے ذریعے وہ آنے والے دنوں میں انہیں بلیک میل کر سکتا ہے۔

 

ایمز ٹی وی(منیلا) اگر منشیات کو نہ روکا گیا تو ملک میں مارشل لاءلگا دوں گا،فلپائنی صدر روڈریگو ڈیوٹرٹ نے اپنے ہی عوام کو دھمکی دے دی ہے۔ فلپائن کے دارالحکومت منیلا میں تاجروں سے خطاب کرتے ہوئے روڈریگو ڈیوٹرٹ کا کہنا تھا کہ فلپائن کو منشیات سے پاک کرنے کے لئے ملک بھر میں جاری آپریشن اپنے مقاصد کے حصول تک جاری رہے گا اور اس کے لئے اگر ملک میں مارشل لاءبھی لگانا پڑے تو لگائیں گے اور انہیں ایسا کرنے سے کوئی نہیں روک سکتا۔ انہوں نے کہا کہ اگر مارشل لا کا اعلان کیا گیا تو اس کا مقصد اقتدار کو طول دینا نہیں بلکہ ملک کو لاحق خطرے کے خاتمے کے لئے ہوگا تاہم اس سے ملک کو کوئی خطرہ نہیں ہوگا۔ فلپائن کے صدر کی جانب سے منشیات کے خاتمے کے لئے جاری آپریشن کے نتیجے میں اب تک 6 ہزار سے زائد افراد کو قتل کیا جاچکا ہے جس پر عالمی اداروں کی جانب سے شدید تحفظات کا اظہار کیا جارہا ہے جب کہ امریکا کی تنقید پر فلپائنی صدر نے اسے ملکی معاملات میں مداخلت نہ کرنے کی ہدایت کی۔ فلپائن کے قانون کے مطابق ملکی مفاد میں کسی مقصد کے حصول کے لئے صدر کو 60 روز کے لئے ملک میں مارشل لاءلگانے کا اختیار حاصل ہے جسے پارلیمنٹ 48 گھنٹے میں کالعدم قرار دے سکتی ہے جب کہ سپریم کورٹ مارشل لا کے قانونی ہونے پر نظرثانی کرسکتی ہے۔ واضح رہے کہ فلپائن میں آخری مرتبہ مارشل لا 1972 میں فرٹیننڈ مارکوس نے ملک سے جرائم کے خاتمے اور کمیونسٹ شورش کے خاتمے کے لئے لگایا جسے 1981 میں اٹھایا گیا تھا

 

 

ایمز ٹی وی(لاہور) پاکستان مسلم لیگ ن کی رہنما عظمیٰ بخاری نے سیاستدانوں کے علاوہ پاک فوج اور عدلیہ پر بھی آئین کے آرٹیکل 62 اور 63 کے اطلاق کا مطالبہ کردیا۔ عظمیٰ بخاری کا کہنا تھا کہ سیاستدان تو اس ملک میں ایسی چیز ہے جسے آپ ہر وقت ملزم ٹھہرا سکتے ہیں اور ان پر آرٹیکل 62 اور 63 بھی لاگوہوتے ہیں اور ان کا میڈیا اور پارلیمنٹ میں بھی ٹرائل ہوتا ہے لیکن باقی لوگوں کے ٹرائل بھی اندر ہی اندر ہوجاتے ہیں اور ان کا کسی کو بھی پتا نہیں چلتا اور نہ ہی رپورٹ باہر آتی ہے۔ بہت سے لوگ ایسے بھی ہیں جن کا اپنا 62،63 ٹھیک نہیں ہوتا لیکن یہ آرٹیکل ہم پر لگوانے بیٹھے ہوتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ آرٹیکل صرف سیاستدانوں کیلئے نہیں ہونا چاہیے اس ملک میں باقی بھی مخلوق ہے جو ملک کو سیاستدانوں سے زیادہ چلا رہے ہیں ، کیا اچھے برے لوگ فوج، عدلیہ اور میڈیا میں نہیں ہیں؟ سب پر آرٹیکل 62 اور 63 لاگو کیا جانا چاہیےa

 

 

ایمز ٹی وی(اسپورٹس) سابق ٹیسٹ بولر سکندر بخت نے دوسرے ون ڈے میں آ سٹریلین ہدف کے بعد نجی چینل پر اپنے تبصرے میں دھمکی دی تھی اگرپاکستانی ٹیم یہ اسکور حاصل کرنے میں ناکام رہی تو میں اپنے گھر کے باہر جمع پانی میں چھلانگ لگادوں گامگر ٹیم نے جیت کران کی جان بچالی۔

 

 


ایمزٹی وی(اسلام آباد) حویلیاں میں حادثے کا شکار ہونے والے طیارے پی کے 661 کے عملے کو نشہ آور یا زہریلی اشیا دیئے جانے کے خدشے کے پیش نظر عملے کے تمام ارکین کی قبر کشائی کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ ذرائع کے مطابق قبر کشائی کے ذریعے میتوں کا میڈیکل ٹیسٹ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے تاکہ اس بات کا تعین کیا جاسکے کہ طیارے کے عملے کے ارکین کو کوئی نشہ آور یا زہریلی اشیا تو نہیں دی گئیں۔

ذرائع کے مطابق پمز ہسپتال انتظامیہ کو قبر کشائی کیلئے وزارت کیڈ کے احکامات موصول ہو گئے ہیں۔ قبر کشائی کیلئے ضلعی انتظامیہ سے باقاعدہ اجازت لی جائے گی جبکہ قبر کشائی کیلئے پمز کے ڈاکٹرز
کا خصوصی میڈیکل بورڈ تشکیل دیا جائے 

 

 

ایمز ٹی وی(واشنگٹن) ڈائریکٹر سی آئی اے جان برینن نے کہا ہے کہ ڈونلڈٹرمپ کو اپنی زبان پر قابو رکھنا ہوگا، امریکا صدر سوشل میڈیا پر ریاست کے اہم اعلانات نہیں کر سکتا۔ سی آئی اے کے ڈائریکٹر جان برینن کا امریکی ٹی وی کو انٹر ویو کے دوران ڈونلڈ ٹرمپ پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہنا تھاکہ ٹرمپ روس کی اہلیت اور نیتو ں کے بارے میں زیادہ نہیں جانتے ۔ انہیں روس کو ہر معاملے میں بری الذمہ قرار دینا نہیں چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ ان کو یقینی بناناہوگا ان کے بیانات سے ملکی سالمیت کو کوئی خطرہ نہیں ہوگا۔یہ معاملہ اب ٹرمپ کا نہیں متحدہ امریکا کا مسئلہ ہے۔اور اگر ٹرمپ صدر کے عہدے کا حلف لیں گے تو امریکا کا مفاد اولین ترجیح ہوگا

 

 

ایمز ٹی وی (صحت)سردیوں کا موسم ہے اور ایسے موسم میں گرم مشروبات کی طلب بے حد بڑھ جاتی ہے۔ حتیٰ کہ وہ افراد جو عام دنوں میں چائے کافی پینا پسند نہیں کرتے وہ بھی اس موسم میں چائے یا کافی سے حرارت حاصل کرنے پر مجبور ہوجاتے ہیں۔ کچھ افرد سیاہ کافی کو سخت ناپسند کرتے ہیں۔ بغیر چینی کی تلخ کافی پینے میں تو مشکل لگتی ہے لیکن درحقیقت اس کے بے شمار فائدے ہیں جنہیں پڑھنے کے بعد آپ بھی ہر روز سیاہ کافی پینا چاہیں گے۔ :جگر کے لیے فائدہ مند کیا آپ جانتے ہیں کسی بھی مشروب سے زیادہ کافی جگر کے لیے فائدہ مند ہے۔ ماہرین کے مطابق روزانہ 3 سے 4 کپ کافی پینے والے افراد میں جگر کے مختلف امراض کا خطرہ 80 فیصد کم ہوجاتا ہے جبکہ ان میں جگر کا کینسر ہونے کے امکانات بھی بے حد کم ہوجاتے ہیں۔ :دماغی امراض میں کمی سیاہ کافی آپ کے دماغ میں ڈوپامائن نامی مادے کی مقدار میں اضافہ کرتی ہے۔ یہ مادہ آپ کے دماغ کو جسم کے مختلف حصوں تک سنگلز بھجنے کے لیے مدد فراہم کرتا ہے۔ ڈوپامائن میں اضافے سے آپ پارکنسن جیسی بیماری سے بچ سکتے ہیں۔ اس بیماری کا شکار افراد کے اعصاب سست ہونے لگتے ہیں اور ان کی چال میں لڑکھڑاہٹ اور ہاتھوں میں تھرتھراہٹ ہونے لگتی ہے۔ یہی نہیں ڈوپامائن کی زیادتی اور دماغی خلیات کا متحرک ہونا آپ کو بڑھاپے کے مختلف دماغی امراض جیسے الزائمر اور ڈیمینشیا سے بچا سکتا ہے۔ :کینسر کا امکان گھٹائے ماہرین کا کہنا ہے کہ روزانہ 3 سے 4 کپ کافی پینے والے افراد میں مختلف اقسام کے کینسر کا خطرہ کم ہوجاتا ہے۔ کافی جگر کے کینسر سمیت آنت اور جلد کے کینسر کے خطرات میں بھی کمی کرتی ہے۔ ڈپریشن سے نجات طبی ماہرین کافی کو پلیژر کیمیکل یعنی خوشی فراہم کرنے والا مادہ کہتے ہیں۔ چونکہ کافی آپ کے دماغی خلیات کو متحرک اور ڈوپامائن میں اضافہ کرتی ہے لہٰذا آپ کے دماغ سے منفی جذبات پیدا کرنے والے عناصر کم ہوتے ہیں اور آپ کے ڈپریشن اور ذہنی تناؤ میں کمی آتی ہے۔ ذہانت میں اضافہ کافی میں موجود کیفین آپ کے نظام ہضم سے خون میں شامل ہوتی ہے اور اس کے بعد یہ آپ کے دماغ میں پہنچتی ہے۔وہاں پہنچ کر یہ آپ کے دماغ کے تمام خلیات کو متحرک کرتی ہے نتیجتاً آپ کے موڈ میں تبدیلی آتی ہے اور آپ کی توانائی، ذہنی کارکردگی اور دماغی استعداد میں اضافہ ہوتا ہے۔ امراض قلب میں کمی ایک تحقیق کے مطابق دن میں 2 سے 3 کپ کافی پینا دن میں کچھ وقت چہل قدمی کرنے کے برابر ہے۔ یہ فالج اور امراض قلب کے خطرے میں بھی کمی کرتی ہے۔ :ذیابیطس کا خطرہ گھٹائے سیاہ کافی آپ میں ذیابیطس کے خطرے کو بھی کم کرتی ہے۔ لیکن اگر آپ اپنی کافی میں کریم اور چینی ملائیں گے تو یہ بے اثر ہوجائے گی۔

 

 

ایمزٹی وی(کراچی/ تعلیم) جامعہ کراچی نے بی کام پرائیوٹ کے امتحانی فارم جمع کرانے کی تاریخ کا اعلان کردیا۔ جامعہ کراچی کے ناظم امتحانات پروفیسر ڈاکٹر ارشد اعظمی کے اعلامیہ کے مطابق بی کام پرائیویٹ کے امتحانی فارم 3فروری تک جمع کرائے جاسکتے ہیں۔ بی کام سال اول ودوم کے امتحانی فارم 4400/= روپے فیس کے ساتھ جبکہ بی کام سال اول ودوئم باہم کے امتحانی فارم 7700/= روپے فیس کے ساتھ جامعہ کراچی کے سلورجوبلی گیٹ پر واقع بینک کائونٹرز پر جمع کرائے جاسکتے ہیں۔ واضح رہے کہ ایسے طلبہ جو 2010 ء یا اس سے قبل کی رجسٹریشن کے حامل ہیں انہیں امتحانی فیس کے علاوہ 3000/= روپے اضافی چارجز بھی جمع کرانے ہوں گے۔

 

 

ایمز ٹی وی(حافظ آباد) بن لادن گروپ آف کمپنیز“ سعودی عرب کے مکینیکل انجینئر محمد راشد نے کہا ہے کہ سعودی عرب میں”بن لادن“ کی کاروباری سرگرمیاں بحال کر دی گئی ہیں اور کمپنی نے نئے پراجیکٹس پر کام بھی شروع کر دیا ہے۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے گزشتہ روز یہاں ”بی ایم آر عرب ٹیک انٹرنیشنل“ سے ہنر مند افراد کی بھرتی کے موقع پرمیڈیاسے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ کمپنی کے انجینئر اجمل آفریدی، مکینیکل انجینئر عمران، الیکٹریکل انجینئر الطاف، جنرل منیجر آف نیشنل مین پاور بیوروپاکستان قیصر محمود، الریاض ٹریڈ ٹیسٹ سنٹر کے ڈاکٹر فیاض احمد، بی ایم آر انٹرنیشنل کے چیئرمین رانا محمد صدیق خاں اور چیف ایگزیکٹو رانا ارشد انجم بھی اس موقع پر موجود تھے۔ محمدعمران نے بتایا کہ کمپنی نے تمام ملازمین کے واجبات کی ادائیگی کا سلسلہ بھی شروع کر دیا ہے اور جنوری کے آخری تک ادائیگی مکمل کر دی جائے گی، کمپنی پاکستانی ہنر مند افراد کو ترجیح دیتی ہے