جمعہ, 04 دسمبر 2020

 

ایمز ٹی وی (کراچی)متحدہ قومی موومنٹ (پاکستان) کے کنونیر ڈاکٹر فاروق ستار نے حق پرست میئر کراچی وسیم اختر، ڈپٹی میئر کراچی ارشد وہرا، حق پرست ڈسٹرکٹ چیئرمین ریحان ہاشمی، معید انور، نیئر رضا اور تمام حق پرست یوسی چیئرمین اور وائس چیئرمین کی جانب سے حالیہ بارشوں میں اپنی مدد آپ کے تحت شہر کراچی کے عوام کی خدمت اور نکاسی آب کے کاموں پر زبردست شاباش پیش کی ہے۔ کنونیر ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا کہ کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈ کراچی کے عوام سے ماہانہ کروڑوں روپے بلز و دیگر ٹیکس کی مد میں لے رہی ہے لیکن حالیہ بارشوں کے میں بلدیاتی نمائندوں کے ساتھ کسی قسم کی معاونت کی اور نہ ہی نکاسی آب کیلئے مشینری فراہم کی۔ ڈاکٹر فاروق ستار نے وفاقی و صوبائی حکومت سے مطالبہ کیا کہ منتخب بلدیاتی نمائندوں کو اختیارات اور وسائل فراہم کئے جائیں اور کراچی واٹر اینڈ سیوریج بورڈ حسب سابق آئین کے آرٹیکل 140-A کے تحت مقامی حکومت کے ماتحت کیا جائے تاکہ منتخب بلدیاتی نمائندے عوام کی خدمت کرسکیں۔

 

 

ایمز ٹی وی (مانیٹرنگ ڈیسک)سوئٹزرلینڈ کے انجینئروں نے گرمیوں میں حرارت جمع کرکے سردیوں میں اسے ایک بٹن دباکر خارج کرنے والے نظام کا ابتدائی نمونہ (پروٹوٹائپ) تیار کرلیا ہے۔ اسی سسٹم میں کچھ تبدیلیاں کرکے محفوظ کردہ حرارت کو ایک سے دوسری جگہ بھی بہ آسانی منتقل کیا جاسکتا ہے۔ سوئٹزرلینڈ کے علاقے گال میں واقع مختلف مادوں کی تیاری اور جانچ کی تجربہ گاہ (ای ایم پی اے) نےانتہائی مرتکز سوڈیم ہائیڈروآکسائیڈ (NaOH) استعمال کرتے ہوئے حرارت جمع کرنے والا ایک نظام بنایا ہے جو ضرورت کے وقت حرارت خارج کرسکتا ہے۔ ہم جانتے ہیں کہ جب خشک سوڈیم ہائیڈروآکسائیڈ پر پانی ڈالا جائے تو حرارت خارج کرنے والا ری ایکش ہوتا۔ یعنی سوڈیم ہائیڈروآکسائیڈ میں موجود کیمیائی توانائی حرارت کی شکل میں خارج ہوتی ہے۔ NaOH اپنی کیفیت میں ہائیگروسکوپک ہوتا ہے یعنی اپنے اطراف سے پانی کے مالیکیول جمع کرکے انہیں اپنی جانب کھینچتا رہتا ہے۔ اسی طرح ہوا میں موجود پانی کے بخارات سے مزید حرارت پیدا کی جاسکتی ہے۔ پھر حرارت خارج کرنے کے لیے صرف اس پر پانی ڈالنا ہوگا۔ مثلاً سورج کی حرارت کو سوڈیم ہائیڈروآکسائیڈ اور پانی کے محلول پر ڈالا جائے تو نمی بھاپ بن کر اڑے گی جس سے محلول مزید مرتکز (کنسرٹیٹڈ) ہوجائے گا اور اس میں حرارت محفوظ ہوجائے گی۔ اس محلول کو کئی ماہ بلکہ سال بھر تک اسٹور میں رکھا جاسکتا ہے۔ پھرضرورت کے وقت دوبارہ پانی ڈال کر اس سے حرارت باہر نکالی جاسکتی ہے۔ عملی طور پر 50 فیصد NaOH کے گاڑھے محلول کو مرغولہ دار (اسپائرل) پائپوں میں رکھا جاسکتا ہے۔ محلول ایک سے دوسری جگہ بہتے ہوئے پانی کے مزید بخارات کو جمع کرتا ہے۔ اس کے بعد حرارت کو حسبِ ضرورت خارج کرایا جاسکتا ہے۔ اس عمل میں سوڈیم ہائیڈروآکسائیڈ کا محلول، ہیٹ ایکسچینجر کے گھومتے ہوئے چھلے میں جاتا ہے جہاں محلول مزید ہلکا ہوکر 30 فیصد تک رہ جاتا ہے جو پانی ڈالنے پر اسے 50 درجے سینٹی گریڈ تک گرم کرسکتا ہے اور اسے مکانوں کے اندر پائپوں کے ذریعے گھر کو گرم رکھا جاسکتا ہے۔ فی الحال ای ایم پی اے ایسی کمپنیوں کی تلاش میں ہے جو اس ایجاد کو تجارتی پیمانے تک لے جاسکیں۔ اس کا ایک چھوٹا سسٹم گھریلو استعمال کے لیے تیار کیا جاسکتا ہے۔

 

 

ایمز ٹی وی ( سندھ) واٹربورڈ نے عدالتی احکامات پر منگھوپیر ریزروائر کے اطراف سے چکنی مٹی و ریت اور بجری نکالنے کا غیرقانونی کاروبار کرنے والوں اور واٹربورڈ کی اراضی پر غیرقانونی قبضہ کرنیوالوں کے خلاف مقدمہ درج کرادیا ،ملزمان کی گرفتاری کیلئے چھاپے مارے جارہے ہیں ،غیرقانونی اقدامات اور قبضہ مافیا کی سرگرمیوں کو روکنے کیلے پولیس چوکی قائم کردی گئی ہے جبکہ پیر سے تجاوزات اور تعمیرات منہدم کرکے زمین واگزار کرانے کے لئے پولیس ،ضلعی انتظامیہ اور واٹربورڈ کا مشترکہ آپریشن متوقع ہے۔ پولیس چوکی کے قیام اور ملزمان کی گرفتاری کیلئے اقدامات ایم ڈی واٹربورڈ کا ڈی آئی جی ویسٹ سے اظہار تشکر کیا ہے جبکہ واٹربورڈ حکام کو متوقع آپریشن کیلئے تیار رہنے کی ہدایات جاری کردی گئی ہیں ،تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ کے احکامات پر بننے والے انکوائری کمیشن کے سربراہ اور ہائی کورٹ کے جج جناب جسٹس اقبال کلہوڑو نے گزشتہ دنوں حب ڈیم کے قریب منگھوپیر کی پہاڑیوںپر240فٹ بلندی پر قائم واٹربورڈ کے ریزر وائر کا دورہ کیا تھا اور ریزروائر کے اطراف چکنی مٹی و ریت اور بجری اٹھائے جانے کے غیرقانونی کاروبار کا نوٹس لیتے ہوئے اس پر تشویش اور برہمی کا اظہار کیا تھا معزز جج فاضل صاحب نے اپنی عدالت میں متعلقہ حکام کو فوری طلب کرلیا تھا جہاںمائنز اینڈ منرل ڈپارٹمنٹ کے اسسٹنٹ ڈائریکٹر راشد عامر نے معزز عدالت کو بتایا کہ ان کے محکمہ نے کسی کو اس مقام سے ریت یا مٹی نکالنے کا لائسنس جاری نہیں کیا ہے اور اگر کیا بھی گیا ہے تو اس کو منسوخ کردیا جائے گا ،جبکہ واٹربورڈ کی جانب سے عدالت کو بتایا گیا کہ مذکورہ مقام پر 868ایکڑ اور17گھونٹے اراضی واٹر بورڈ کی ملکیت ہے جس میں سے کچھ پر غیرقانونی صنعتی زون اور گوٹھ قائم کردیئے گئے ہیں معزز عدالت نے انتظامیہ ،پولیس اور واٹربورڈ کو حکم دیا کہ فوری طور پر یہ غیر قانونی کاروبار اور قبضہ ختم کرایا جائے ،نیز واٹربورڈ کے چیف سیکورٹی آفیسر کو حکم دیا تھا کہ واٹربورڈ کی اراضی کی حفاظت کے لئے موثر سیکورٹی اقدامات کریں۔ معزز عدالت کے ان احکامات پر فوری طور پر آپریشن شروع کردیا گیا تھا ، تاہم موسم کی خرابی اور برسات کی وجہ سے اسے مکمل نہیں کیا جاسکا ہے ،ڈپٹی کمشنر ویسٹ آصف جمیل نے پیر کی صبح اس سلسلے میں ایک اہم اجلاس اپنے دفتر میں طلب کرلیا ہے ،جس میں اسسٹنٹ ڈپٹی کمشنر ویسٹ ، ڈی آئی جی ویسٹ ،واٹربورڈ کے ڈپٹی منیجنگ ڈائریکٹر ٹیکنیکل سروسز ، چیف سیکوریٹی آفیسر میجر ( ر) نواز گوندل سپرنٹنڈنگ انجینئر ظفر پلیجو اور دیگر حکام شرکت کریں گے ،اجلاس میں واٹربورڈ کی جانب سے اس کی اراضی کی بابت کاغذات بھی ڈپٹی کمشنر ویسٹ اور دیگر حکام کو پیش کئے جائیں گے۔ توقع ہے کہ اجلاس کے بعد واٹربورڈ کی اراضی سے قبضے کے خاتمے کیلئے بھرپور آپریشن شروع کیا جائے گا ،ایم ڈی واٹربورڈ نے اس سلسلے میں واٹربورڈ حکام کو ضروری احکامات دیدیے ہیں اور انہیں تیار رہنے کی ہدایت کی ہے ایم ڈی واٹربورڈ نے مذکورہ علاقہ میں پولیس چوکی قیام پر ڈی آئی جی ویسٹ سے اظہار تشکر کیا ہے اور امید ظاہر کی ہے کہ وہ اس ضمن میں موثر اقدامات کریںگے تاکہ آپریشن کے بعد قابضین اور ریت و بجری اٹھانے کا غیر قانونی کاروبار کرنے والے دوبارہ فعال نہ ہوسکیں انہوںنے ڈائریکٹر لیگل افیئر چن زیب تنولی اور ڈائریکٹر لینڈ شعیب تغلق کو بھی ہدایت کی ہے کہ وہ اس سلسلے میں ضروری اقدامات کرلیں ،واضح رہے کہ واٹربورڈ نے ریزر وائر کے اطراف سے بجری اور مٹی اٹھانے اور غیرقانونی قبضے کرنے والے ملزمان دولت خان اور دیگر کے خلاف مقدمہ درج کرادیاہے۔

 

 

ایمز ٹی وی(گوجرانوالہ) گوجرانوالہ میں دہشت گردی کا منصوبہ ناکام بنادیاگیا، سی آئی اے پولیس اور حساس اداروں نے مشترکہ کارروائی کے دوران ناکہ بندی پر چن دا قلعہ میں مشکوک کار سے ناجائزاسلحہ کی بھاری کھیپ پکڑ لی۔ برآمداسلحہ میں 20پسٹل اور 13ہزار گولیاں برآمدہوئیں، برآمدہ ایمونیشن میں خود کار اسلحہ کی گولیاں بھی شامل، گرفتار ملزمان میں فردوس سکنہ خیبر ایجنسی اور تعظیم سکنہ سرگودھا شامل ہیں،جو کہ عرصہ دراز سے پنجاب بھر میں ناجائز اسلحہ کی سپلائی کر رہے ہیں۔ سی آئی اے پولیس اور حساس اداروں کو خفیہ اطلاع ملی تھی کہ چند شرپسند عناصر دہشت گردی جیسے خطرناک مقاصد کی تکمیل کے لئے ناجائز اسلحہ کی بھاری کھیپ لے کر گوجرانوالہ شہر میں داخل ہو رہے ہیں۔پولیس نے چن داقلعہ ناکہ بندی کے دوران لاہور سائیڈ سے آتے ہوئے ایک مشکوک سوزوکی کار نمبری Lzz/3675کو روک کر تلاشی لی۔دوران تلاشی کار میں رکھے ہوئے سی این جی سلنڈراور خفیہ خانوں سے اسلحہ اور ایمونیشن کی بھاری مقدار برآمد ہوئی، دو ملزمان فردوس اور تعظیم کو حراست میں لے کر ابتدائی تفتیش عمل میں لائی گئی۔ملزمان نے دوران تفتیش انکشاف کیا کہ وہ شہر میں اسلحہ ڈیلروں سمیت شر پسند عناصر کو اسلحہ کی کھیپ پہنچانا چاہتے تھے

 

 

ایمز ٹی وی(نئی دہلی) بھارتی فوجی نے خود کشی کر لی سیکیورٹی فورسز کے اہلکار نے خود کو گولی مار کر زندگی کا خاتمہ کر لیا ۔ اہلکار بنگلو ر ایئر پور ٹ پر موجود تھا کہ اس نے اچانک پستول نکالا اور خود کو گولی مار لی ۔مرنے والے اہلکار کی لاش قبضے میں لے لی گئی ہے اور واقعے کے تحقیقات کا آغاز کر دیا گیا ہے ۔مرنے والے فوجی کی شناخت اور خود کشی کی وجہ تاحال نہیں بتائی گئی ۔ یاد رہے چند روز قبل راجوڑی سیکٹر پر تعینات ایک بھارتی فوجی تیج بہادر نے ایک ویڈیو پیغام میں کھانے پینے اور افسران کی کرپشن کا پردہ چاک کیا تھا جس کے بعد بھارتی فوج میں کھلبلی مچ گئی ۔ اس کے بعد یہ خبر بھی آئی کہ بھارتی فوجیوں نے ایک دوسرے پر فائرنگ کر دی اور آج خودکشی کا واقعہ سامنے آیا ہے

 

 

ایمز ٹی وی(مانیٹرنگ ڈیسک)انسانوں سمیت بیشتر جاندار کئی طرح کی خوراک پر آسانی سے زندگی گزار لیتے ہیں، یعنی جو چیز دستیاب ہو اور انہیں لذیذ لگے وہ کھا لیتے ہیں۔مگر کچھ جاندار ایسے ہوتے ہیں جو مخصوص غذا سے ہٹ ہی نہیں سکتے اور ان میں سے چمگادڑوں کی تین اقسام بھی ہیں جو کہ خون پی کر ہی پلتی بڑھتی ہیں۔ ان تین میں سے دو اقسام کے بارے میں معلوم ہے کہ وہ کسی بھی جاندار کے خون کو اپنی غذا کا ذریعہ بنالیتی ہے مگر تیسری ہیئری لیگ ویمپائر بیٹ کو صرف پرندوں کا خون چوسنے والا سمجھا جاتا تھا۔ مگر اب اس کے بارے میں جو حقیقت سامنے آئی ہے اس نے سائنسدانوں کو دنگ اور عام لوگوں کو خوفزدہ کردیا ہے۔برازیل کی Universidade Federal de Pernambuco کی تحقیق میں انکشاف ہوا کہ یہ چمگادڑیں اب انسانی خون کو اپنی غذا بنانے لگی ہیں جو کہ پہلے سائنسدانوں کو ممکن نہیں لگتا تھا۔ تحقیق کے مطابق شمال مشرقی برازیل کے جنگلات میں انسانی آبادیاں بڑھنے اور درختوں کے کٹنے سمیت وہاں پرندوں کے شکار کی وجہ سے چمگادڑوں کو غذائی قلت کا سامنا تھا اور اس کا حل انہوں نے انسانی خون کی شکل میں نکالا۔ اس تحقیق کے دوران چمگادڑوں کے فضلے کی جانچ کرکے جاننے کی کوشش کی گئی کہ ان کی غذا کیا ہے اور کیا وہ پالتو مویشیوں کا خون تو نہیں چوستیں۔ مگر نتائج نے سائنسدانوں کو دنگ کردیا کیونکہ یہ معلوم ہوا کہ انسان اب ان کا نیا شکار ہیں۔محققین کا کہنا تھا ' یہ بہت زیادہ حیران کن ہے، کیونکہ یہ مانا جاتا تھا کہ یہ پرندے ممالیہ جانداروں کے خون کو غذا کے طور پر استعمال نہیں کرتے'۔ صرف انسانی خون چوسنا ہی ڈرا دینے والا نہیں بلکہ یہ چمگادڑیں جان لیوا وائرس بھی اپنے شکار میں منتقل کرنے کی صلاحیت رکھتی ہیں جو کہ کتے کے کاٹنے سے لاحق ہونے والے مرض ربیز جیسا ہوتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ گزشتہ برسوں میں شمال مشرقی برازیل میں ایک ہزار سے زائد افراد چمگادڑوں کے کاٹنے سے ربیز کے شکار ہوئے اور کم از کم 23 ہلاکتیں ہوئیں۔یہ تحقیق جریدے جرنل ایکتا Chiropterologica میں شائع ہوئی۔

 

 

 

ایمز ٹی وی(نئی دہلی) نیوایئرنائٹ کے موقع پر بھارتی شہربنگلورمیں راہ چلتی خواتین کو پکڑ کر زبردستی سرعام بوس و کنار اور خواتین سے جنسی درندگی کے واقعات پر کھڑا ہونیوالا ہنگامہ تاحال ٹھنڈا نہیں ہوا اور اکشے کمار ، عامر خان جیسے کئی اداکاروں کے بعد شاہ رخ خان بھی میدان میں آگئے ہیں اور کہاہے کہ وہ بھی ایک بیٹی کے باپ ہیں ، اگرمیرے بیٹوں نے کسی عورت کی ہتک کی تو خود ہی ان کے سرقلم کردوں گا۔ انڈیا ٹائمز کے مطابق شاہ رخ خان نے بتایاکہ وہ اپنے دونوں بیٹوں سے توقع رکھتے ہیں کہ عورتوں کا احترام کریں اور اچھے رویہ سے پیش آئیں ، میں نے اپنے دونوں بچوں آریان اورابرام کو بتایاکہ کبھی بھی عورت کو تکلیف نہ پہنچائیں ، اگرآپ نے ایسا کیا تو میں آپ کا سرقلم کردوں گا، ایک لڑکی آپ کی چھڈی بڈی نہیں ہے ، عزت سے پیش آنا چاہیے ، بنگلور واقعہ قابل مذمت ہے ، فنکاروں کو بھی واضح موقف اپناناچاہیے کیونکہ وہ معاشرے میں بالآخراپنا اثر ورسوخ رکھتے ہیں۔ اُنہوں نے کہاکہ فنکاروں کو نہ صرف عملی اقدامات نہ کرنے پر سیاستدانوں کے پیچھے پڑنے کی بجائے اس حقیقت سے بھی پردہ اٹھانا چاہیے کہ مردوں کو خواتین کی حفاظت کیلئے مشترکہ طورپر اقدامات کرنے ہوں گے ، اکشے کمار جیسے فنکار خواتین کی حفاظت یقینی بنانے کے لیے مارشل آرٹس کے کیمپس بھی لگارہے ہیں جبکہ فرحان اختر 2013ءسے’مرد، ریپ مخالف مرد‘ کے نام سے ایک سماجی مہم شروع کررکھی ہے

 

 

کراچی وزیر اعلی سندھ سید مراد علی شاہ نے سندھ کابینہ کا اجلاس پیر 16جنوری کو صبح گیارہ بجے طلب کرلیا ہے اجلاس میں امن وامان کی صورتحال ، ترقیاتی منصوبوں ،رینجراختیارات ،دینی مدارس ،اطلاعات تک رسائی ،زکوۃ وعشر کی صوبائی سطح پروصولی کے بل سمیت دیگرامور پرغورہوگا اور اہم فیصلے متوقع ہیں ، سندھ کابینہ کے لیے نونکاتی ایجنڈا جاری کردیا گیا ہے۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ رینجراختیارات کے معاملے پر پیر 16جنوری کوہونے والے اجلاس میں تفصیلی غورکیا جائے گا اورسندھ کابینہ سے منظوری کے بعد رینجراختیارات کی سمری پرمزید کارروائی آگے بڑھائی جائے گی، ذرائع کا کہنا ہے کہ سندھ رینجرکے اختیارات کی مدت ختم ہورہی ہے جس میں توسیع کے لیے سندھ حکومت نے تاحال کوئی فیصلہ نہیں کیا ہے، اجلاس نیو سندھ سیکرٹریٹ میں ہوگا۔

 

 

ایمز ٹی وی(اسپورٹس)متحدہ قومی موومنٹ (پاکستان ) کے کنوینر ڈاکٹر محمدفاروق ستار نے پاکستانی کرکٹ ٹیم کی جانب سے آسٹریلیا کو شکست دینے پر پوری قوم کو دلی مبارکباد پیش کی ہے اور کہا ہے کہ پاکستانی کرکٹ ٹیم نے جس مہارت اور اسپرٹ کا مظاہرہ کیا ہے اس سے تمام پاکستانیوں کے سر فخر سے بلند کردیئے ہیں ۔ ایک بیان میں ڈاکٹر فاروق ستار نے کہاکہ قومی کرکٹ ٹیم نے میلبرون کے کرکٹ گرائونڈ میں آسٹریلیا کو سخت مقابلے کے بعد 6وکٹوں سے شکست دی جو کہ مثالی کارکردگی ہے اور گرین شرٹس نے یہ ثابت کیا کہ وہ ترنوالہ نہیں اورکسی وقت بھی بڑے سے بڑے مخالف کو زیر کرسکتی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ قومی کرکٹ ٹیم نے تمام شعبوں میں مہارت کا مظاہرہ کیا جبکہ قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان محمد حفیظ نے اپنی تمام تر صلاحیتوں کو بہترین طریقے سے استعمال کیا اور ٹیم کے ہر کھلاڑی نے اس کامیابی میں اپنا حصہ ڈالاجس پر کپتان سمیت ایک ایک کھلاڑی زبردست خراج تحسین اور شاباش کا مستحق ہے ۔ ڈاکٹر فاروق ستار نے امید ظاہر کی کہ مستقبل میں بھی ہماری قومی کرکٹ ٹیم اسی اسپرٹ کا مظاہرہ کرتے ہوئے دیگر میچوں میں بھی کامیابی حاصل کرے گی اور متعصب تجزیہ نگاروں کے تجزیوں کو غلط ثابت کرے گی ۔