منگل, 23 اپریل 2024


جنگ میں دشمن سے اب روبوٹس لڑیں گے، امریکا نے تربیت شروع کردی

ایمز ٹی وی ﴿سائنس اینڈ ٹیکنالوجی﴾ اب میدان جنگ میں دشمن سے انسان نہیں بلکہ روبوٹ لڑیں گے۔ اس سلسلے میں امریکا میں جنگجو روبوٹس کی تربیت شروع کر دی گئی ہے۔ یہ کوئی عام روبوٹ نہیں، قد 6 فیٹ 2 انچ، آنکھوں میں لیزر، اور مضبوط گرفت والے ہاتھ کے حامل یہ روبوٹ نہ صرف کسی بھی ناہموار سطح پر اپنا توازن برقرار رکھ سکتے ہیں، دوڑ سکتے ہیں اور سامنے اگر دیوار آجائے تو اسے توڑنے کے ساتھ ساتھ گاڑی چلانے کی بھی صلاحیت رکھتے ہیں۔ 

 

امریکی محکمہ دفاع کی جانب سے تیار کیے جانے والا یہ روبوٹ جلد ہی لیبارٹری سے روبوٹس کیمپ بھیج دیا جائے گا، جہاں اس کا مقابلہ دوسرے روبوٹس سے کرایا جائے گا، تاکہ اس کی جسمانی طاقت، صلاحیت اور ماحول سے آگہی کا بھی امتحان لے لیا جائے۔ رپورٹ کے مطابق اس روبوٹ کی تیاری پر محکمہ دفاع کا تحقیقی ادارے ڈارپا اب تک 10کروڑ ڈالر خرچ کرچکا ہے اور جس کا مقصد ان روبوٹس کو ایسے خطرناک مقامات اور مہمات میں بھیجنا ہے، جہاں انسانوں کا جانا ممکن نہیں یا پھر خطرات ہوتے ہیں۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment