جمعہ, 01 مارچ 2024


پولیس کا جدید ٹیکنالوجی سے لیس فارنسک موبائل اسٹیشن تیار

ایمز ٹی وی (سائنس) : سندھ پولیس کے شعبہ فارنسک ڈویژن نے آسٹریلین فیڈریشن پولیس کی اشتراک سے جدید ٹیکنالوجی سے لیس فارنسک موبائل اسٹیشن تیارکر لیا، فارنسک موبائل اسٹیشن دہشت گردی اور ٹارگٹ کلنگ سمیت سنگین نوعیت کے اہم واقعات کے جائے وقوع پر پہنچ کر تمام شواہد اکٹھے کرے گا اور جائے وقوع پر ہی شواہد کا تجزیہ کرکے ابتدائی رپورٹ متعلقہ پولیس افسران کے حوالے کرے گا تاکہ متعلقہ پولیس واردات میں ملوث ملزمان کا جلد از جلد سراغ لگا کر انہیں کیفر دار تک پہنچاسکے گی۔ ے آئی جی فارنسک ڈویژن سندھ عبداﷲ شیخ نے بتایا ہے کہ فارنسک موبائل اسٹیشن28 لاکھ روپے مالیت سے تیار کیا گیا ہے اور فارنسک اسٹیشن میں فنگر پرنٹس ، بیلسٹک اینڈ فائر آرم ، ڈیجیٹل فارنسک ، دستاویزات کی جانچ پڑتال سمیت دیگر جدید آلات نصب کیے گیے ہیں تاکہ فارنسک موبائل اسٹیشن واردات کے بعد فوری طور پر پہنچے اور کرائم سین پر موجود ، فنگر پرنٹس، اسلحے، گولیوں کے خول، موبائل فون، لیپ ٹاپ سمیت تمام شواہد کا تجزیہ کرے گا اگر جائے وقوع (کرائم سین) پر موٹر سائیکل سمیت کوئی بھی گاڑی موجود ہو تو اس کا بھی معائنہ کرکے اپنی ابتدائی رپورٹ پولیس افسران کو دے گا ۔۔ انھوں نے بتایا کہ فارنسک موبائل اسٹیشن میں 6 فارنسک ماہرین کو تعینات کیے جائیں گے اور اس سلسلے میں فارنسک ماہرین کو اسٹیشن میں نصب جدید ٹیکنالوجی سے لیس فارنسک آلات کے حوالے سے13مئی کو فارنسک ڈویژن سندھ میں ایک روزہ تربیتی کورس بھی کرایا جائے گا انھوں نے بتایا کہ فارنسک موبائل اسٹیشن کسی بھی واقع کے جائے وقوع (کرائم سین) پر چاروں اطراف360 ڈگری تک کی جدید کیمروں سے ویڈیو ریکارڈنگ کرے گا اور خود کار نظام کے تحت اس ویڈیو ریکارڈنگ کا بیک اپ بھی تیار کرے گا تاکہ تفتیشی افسران کو کرائم سین سمجھنے میں آسانی ہو اور تحقیق میں آسانی پیدا کی جاسکے، فارنسک اسٹیشن سندھ پولیس کے لیے انتہائی اہمیت کا حامل ہے اور مذکورہ یونٹ بڑی کوششوں کے بعد تیار کیا گیا ہے، فارنسک موبائل اسٹیشن13مئی کے بعد کام شروع کردے گا

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment