ھفتہ, 27 فروری 2021


پشاور بی آر ٹی منصوبہ حکومت کے لیے درد سر بن گیا

ٹرانسپورٹ سیکٹر کے حوالے سے پشاور بی آر ٹی، خیبرپختونخوا میں تحریک انصاف کی حکومت کا سب سے پہلا پراجیکٹ ہے جو کہ کئی بار ڈیزائن میں تبدیلی اور منصوبے کی تکمیل سے متعلق کئی ڈیڈ لائنز دیے جانے پر بیک وقت تنقید اور مذاق کا نشانہ بن رہا ہے۔
 
یہ بی آر ٹی منصوبہ پی ٹی آئی حکومت کیلئے واقعی میں درد سر بن چکا جس کی ڈيزائننگ ميں ايک بار پھر غلطی سامنے آگئی ہے۔
 
پشاور کے علاقے حيات آباد فيزتھری بس اسٹاپ کا ٹريک تنگ ہونے کے باعث بسوں کا گزرنا مشکل ہوگا۔ یہ غلطی سامنے آنے کے بعد ٹريک کشادہ کرنے کيلئے 8 نئے پلرز بنائے جارہےہيں۔
 
صوبائی وزير اطلاعات شوکت یوسفزئی کے مطابق ان خاميوں کي نشاندہی ايشين ڈویلپمنٹ بینک نے کی تھی۔
 
دوسري جانب شہريوں نے بھی اس منصوبے میں تاخیر اور بار بارنقائص کی نشاندہی کوپی ڈی اے اورانجينئرزکی نااہلی قرارديا۔
 
یاد رہے کہ اس سے قبل بھی سنہری مسجد روڈ ، شعبہ بازار، گلبہاراور يونيورسٹی روڈ ٹريک کے ڈيزائن ميں بھی غلطياں سامنے آچکی ہیں۔

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment