اتوار, 17 اکتوبر 2021


اساتذہ کی شامت

 

ایمز ٹی وی (تعلیم /راولپنڈی ) پنجاب ایگزامینیشن کے تحت ہونے والے پنجم اور ہشتم کے امتحانات 2فروری سے شروع ہو رہے ہیں۔ اس کیلئے بائیکاٹ کا اعلان کرنے والے اساتذہ کے ایک گروپ کے خلاف سخت ایکشن لینے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔ اس ضمن میں فہرست بھی تیار کر لی گئی ہے۔ ذرائع کے مطابق جو اساتذہ امتحانات سے غیرحاضر ہونگے اُن کے خلاف پیڈا ایکٹ 2006ء کے تحت کارروائی کرتے ہوئے برطرفی کی سزا بھی دی جا سکتی ہے۔

ذرائع کے مطابق گورنمنٹ اسکولوں کی کارکردگی پر عوامی رائے بھی کچھ اچھی نہیں‘ لہٰذا اس طرح کے سخت اقدامات سے بچوں کا قیمتی سال ضائع ہونے کا خدشہ ہے۔ ادھراساتذہ کے دیگر گروپ کے ممبران امتحانات میں ڈیوٹیاں لگوا رہے ہیں۔ ذرائع نے بتایا کہ اساتذہ تنظیمیں اسی طرح انتشار کا شکار رہیں تو نقصان اساتذہ کا ہوگا۔ اس وقت اساتذہ تنظیموں کے 4اتحاد بنے ہوئے ہیں جن میں ایک گروپ نے بائیکاٹ کا اعلان کر رکھا ہے۔ ‘ کچھ گروپ یکم فروری سے مذاکرات کیلئے پرتول رہے ہیں۔

دوسری طرف حکام بالا بھی ٹس سے مس نہیں ہو رہے نہ ہی مذاکرات کی دعوت دے رہے ہیں۔ دوسری طرف سپریم کورٹ کے ایک فیصلہ کے مطابق اساتذہ سے غیرتدریسی فرائض نہیں لئے جا سکتے لہٰذا ان قائدین کو بائیکاٹ کے بجائے سپریم کورٹ سے توہین عدالت کیلئے رجوع کرنا چاہئے۔ ادھر معلوم ہوا ہے کہ ضلع راولپنڈی میں پنجم اور ہشتم کے امتحانات کے تمام انتظامات مکمل ہیں اور اساتذہ کی اکثریت امتحانات لینے کیلئے تیار ہے۔ اس گومگو کی صورتحال میں والدین اور طلباء سخت پریشان ہیں‘ انتظامیہ کو بھی صورتحال واضح کر کے والدین کو مطمئن کرنا چاہئے

 

پرنٹ یا ایمیل کریں

Leave a comment